45

مصنوعی ہڈی اصلی ہڈی کا حصہ بن گئی..!

تھری ڈی پرنٹرز؛

کراچی (نائینٹی فائیو نیوز تازہ ترین) اگر کسی جاندارکی ہڈی میں معمولی فریکچر ہوجائے تو ہڈی کچھ ہفتوں میں ازخود ٹھیک ہوجاتی ہے اگر شدید بری طریقے سے ٹوٹ گئی ہو تواس صورت میں اسے دھاتی پلیٹوں اور نٹ بولٹ سے جوڑدیا جاتا ہے جو تکلیف دہ اور مہنگا عمل ہوتا ہےمگر اس سے بھی آرام آ جاتا ہے- لیکن اب تھری ڈی پرنٹرآ گیا ہے-پرتھ کے علاقے میں ایک ڈاکٹر نے تھری ڈی پرنٹر سے بنی مصنوعی ہڈی کا ایک ٹکڑا جب پیوندکاری کے ذریعے لگایا گیا تو وہ ٹکڑاخود اس ہڈی سے جڑ کر اس کا حصہ بن گیا۔

مصنوعی ٹکڑے سے حلق کو جوڑنا؛

کچھ عرصہ پہلے ایک بچے کے حلق کے متاثرہ حصے پر تھری ڈی پرنٹر سے بنایا گیا حلق کا ٹکڑا کامیابی سے جوڑا گیا تھا لیکن یونیورسٹی آف سڈنی کی پروفیسر ہالہ زریقت اور ان کے ساتھیوں نے تھری ڈی پرنٹر کے ذریعے ہڈی کا ٹوٹا ہوا حصہ بنایا اورپھر اس حصے کو خرگوش کے جسم میں لگایا تو اس کے حیران کر دینے والے نتائج برآمد ہوئے۔اس کامیابی کے بعد اس ٹیم نے ایک بھیڑ کی ٹانگ کے فریکچر حصے کو درست کیا اور اس طرح پرانے روایتی علاج کے بجائے تھری ڈی پرنٹرکے زریعے ہڈیوں کو جوڑنے لگے۔ اس کے بعد 8 بھیڑیں پیوند لگنے کے فوراً بعد ہی چلنے پھرنے کے قابل ہوگئیں۔

مصنوعی دل کی تیاری؛

ماہرین کے مطابق تھری ڈی پرنٹر سے بنی مصنوعی ہڈی لگانے کے 3 ماہ بعد فریکچر کا زخم 25 فیصد تک ٹھیک ہوگیا اور ایک سال کے دوران اس میں 88 فیصد بہتری پیدا ہوئی۔ جب بھیڑوں کے ایکسرے لیے گئے تو پتا چلا کہ اصل ہڈی دوبارہ اگنے لگی اور سرامک سے بنا ہڈی کا ٹکڑا دھیرے دھیرے اس کا حصہ بن گیا۔ تھری ڈی پرنٹر کے ذریعے خون کی مصنوعی نالیاں اور شریانیں بنانے میں بھی خاطر خواہ ترقی ہوئی ہے جب کہ جولائی میں ڈاکٹرز نے تھری ڈی پرنٹر سے مصنوعی دل بھی تیار کیا تھا۔امید کی جاتی ہے کہ اس ایجاد سے مستقبل میں دل کے ان مریضوں کےلیے دل بنائے جا سکتے ہیں جو آج دل کے عطیے کے انتظار میں اس دنیا سے رخصت ہوجاتے ہیں۔

Latest news,News today,News update,News urdu,World news,Urdu news,3D Printers

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں